• عزاداری مذہبی و شہری آزادیوں کا مسئلہ، قدغن قبول نہیں، علامہ شبیر میثمی
  • قائد ملت جعفریہ علامہ ساجد نقو ی کی ا پیل پر بھارت میں توہین آمیز ریمارکس پر ملک گیر احتجاج
  • قائد ملت جعفریہ پاکستان کی مختلف شخصیات سے ان کے لواحقین کے انتقال پر تعزیت
  • اسلامی تحریک پاکستان کا گلگت بلتستان حکومت میں شامل ہونے کا فیصلہ
  • علماء شیعہ پاکستان کے وفدکی وفاقی وزیر تعلیم سے ملاقات نصاب تعلیم پر گفتگو مسائل حل کئے جائیں
  • بلدیاتی انتخابات سندھ: اسلامی تحریک پاکستان کے امیدوار بلامقابلہ کامیاب
  • یاسین ملک کو دی جانے والی سزا ظلم پر مبنی ہے علامہ شبیر حسن میثمی شیعہ علماء کونسل پاکستان
  • ملی یکجہتی کونسل اجلاس علامہ شبیر میثمی نے اہم نکات کی جانب متوجہ کیا
  • کراچی میں دہشتگردی کی مذمت کرتے ہیں شیعہ علماء کونسل پاکستان صوبہ سندھ
  • اسلامی تحریک پاکستان کا اعلی سطحی وفد گلگت بلتستان کے دورے پر اسکردو پہنچے گا

تازه خبریں

دہشتگردی انسانیت کی دشمن ہے سری لنکا میں بم دھماکوں کی مذمت کرتے ہیں قائد ملت جعفریہ پاکستان

دہشتگردی انسانیت کی دشمن ہے سری لنکا میں بم دھماکوں کی مذمت کرتے ہیں قائد ملت جعفریہ پاکستان

دہشتگردی انسانیت کی دشمن ہے اور دہشتگرد کسی رعائت کے مستحق نہیں ، قائد ملت جعفریہ علامہ ساجد نقوی

سری لنکا میں بم دھماکوں کی شدید الفاظ میں مذمت ، متاثرہ خاندان کے ساتھ اظہار ہمدردی ، قائد ملت جعفریہ

 راولپنڈی /اسلام آباد21 اپریل 2019 ء (   جعفریہ پریس   )

    قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نےسری لنکا میں مسیحی برادری کے بڑے تہوار ایسٹر کے موقعے پر تین گرجا گھروں اور تین مختلف ہوٹلوں میں بم دھماکوں کے نتیجہ میں 35 غیر ملکی سیاح سمیت کم از کم 158 افرادکے جانی ضیاع اور400سے زائد افراد کے زخمی ہونے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشتگردی انسانیت کی دشمن ہے اور دہشتگرد کسی رعائت کے مستحق نہیں ۔

علامہ ساجد نقوی کا کہناتھا کہ و ہ متاثرہ خاندانوں کے غم میں برابر کے شریک ہیں اور انکے ساتھ مکمل اظہار ہمدردی کرتے ہیں۔انہوں نے مزید کہاکہ پاکستان خود ایک عرصہ سے دہشتگردی کا شکار چلا آرہا ہے لہذاپاکستان سمیت دیگرتمام ممالک کو چاہیے کہ دنیا سے دہشتگردی کی روک تھام اور خاتمے کیلئے متحد ہو کر موثراور ٹھوس اقدامات اٹھاناوقت کی ضرورت بن چکا ہے تاکہ پوری دنیا سے دہشتگردی کے خاتمے کو یقینی بناتے ہوئے قیمتی انسانی جانوں کے تحفظ کوممکن بنایا جا سکے۔