شیعہ علماءکونسل پاکستان نے کوئٹہ میں جاری ٹارگٹ کلنگ کے خلاف یوم جمعہ کو یوم احتجاج کے طور پر منانے کا اعلان کردیا
کوئٹہ میں ہزارہ برادری کی مسلسل ٹارگٹ کلنگ تشویشناک ہے، دہشتگردی کا جڑ سے خاتمہ کیا جائے، علامہ عارف واحدی

اسلام آباد30 اپریل 2018ء (   جعفریہ پریس      )شیعہ علماءکونسل پا کستان نے کوئٹہ میں جاری دہشت گردی کےخلاف چار مئی یوم جمعہ کو یوم احتجاج کے طورپر منانے کا اعلان کرتے ہوئے ملک گیر احتجاج کی کال دیدی، مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی نے کہاہے کہ کوئٹہ میں ہزارہ برادری کی مسلسل ٹارگٹ کلنگ تشویشنا ک ہے، دہشت گردی کا جڑ سے خاتمہ کیا جائے، یوم جمعہ کو ملک بھر کی مساجد میں اجتماعات جمعہ میں مذمتی قراردادیں منظور کرانے کے ساتھ ساتھ احتجاجی ریلیاں بھی نکالی جائیں گی۔

    شیعہ علماءکونسل پاکستان کے مرکزی رہنماﺅں سے مشاورت کے بعد اپنے جاری بیان میں سیکرٹری جنرل شیعہ علماءکونسل پاکستان علامہ عارف حسین واحدی نے کہاہے کہ قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی کے حکم پرکوئٹہ اور ڈیرہ اسماعیل خان میں جاری ٹارگٹ کلنگ خصوصاً ہزارہ برادری کی مسلسل نسل کشی کے خلاف چار مئی 2018ءبروز جمعہ کو یوم احتجاج کے طور پر منایا جائےگا۔ ملک بھر کی تمام مساجد و امام بارگاہوں کے اجتماعات میں جمعہ میں مذمتی قراردادیں منظور کی جائیں گی جبکہ بعد از نماز جمعہ ملک گیر پرامن ریلیوں کا انعقاد بھی کیا جائےگا۔ علامہ عارف واحدی نے کہاکہ کچھ عرصہ پرامن حالات کے بعد اب دوبارہ دہشت گرد سر اٹھا رہے ہیں اور دوبارہ مذموم کارروائیوں کے ذریعے مکتب تشیع اور خصوصاً ہزارہ برادری کو نشانہ بنایا جارہاہے ، کوئٹہ میں حالیہ واقعات کے بعد صوبائی حکومت کی جانب سے کوئی خاص اقدام نہیں اٹھایاگیا ایسا لگتاہے کہ جیسے صوبہ میں آئین و قانون اور انصاف نام کی کوئی چیز نہیں ہے ۔ انہوںنے مطالبہ کیا کہ حالیہ ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں ملوث دہشت گردوں کو فی الفور قانون کے کٹہرے میں لایا جائے، دہشت گردوں کے خلاف شکنجہ سخت کیا جائے اور صوبہ بلوچستان میں امن وامان کو یقینی بنانے اور خصوصاً عوا م کے جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here