عزاداری سید الشہداءمیں رکاوٹیں برداشت نہیں،علامہ عارف واحدی شیعہ علماء کونسل پاکستان
عزاداری سید الشہداءمیں رکاوٹیں برداشت نہیں،علامہ عارف واحدی شیعہ علماء کونسل پاکستان

عزاداری سید الشہداءمیں رکاوٹیں برداشت نہیں،علامہ عارف واحدی شیعہ علماء کونسل پاکستان

شیعہ علما کونسل کے مرکزی سیکریٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی نے ایک وفد کے ساتھ اسلام آباد کے مرکزی جلوس عزا میں شرکت اور پرھجوم میڈیا سے گفتگو کی-
عزاداری سید الشہداءمیں رکاوٹیں برداشت نہیں،علامہ عارف واحدی
مجالس عزادری سید الشہداءکے انعقاد پر ایف آئی آرز کا اندراج خلاف آئین اقدام ہے جو قابل قبول نہیں ، مرکزی سیکرٹری جنرل شیعہ علماءکونسل
ملک میں بھائی چارے کی فضا قائم کرنے کےلئے علامہ سید ساجد علی نقوی نے بھر پور کردار ادا کیا ، نومحرم کے مرکزی جلوس علم و ذولجناح کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو
اسلام آباد/راولپنڈی9ستمبر 2019ء( جعفریہ پریس)شیعہ علماءکونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل اور مرکزی محرم کمیٹی کے سربراہ علامہ عارف حسین واحدی نے کہاکہ ہم عزاداری سید الشہداءکے سلسلے میں کسی رکاوٹ کو برداشت نہیں کرینگے، ہم آزاد ملک میں آزاد شہری کی طرح عزاداری منانا چاہتے ہیں اور یہ ہماراآئینی ، جمہوری ، بنیادی حق اور شہری آزادیوں کا مسئلہ ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے مرکزی جلوس نو محرم علم ، ذولجناح و تعزیہ اسلام آباد میں شرکت کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، اس موقع پرعلامہ نافرحت عباس جوادی نیئراقبال بلوچ ضلعی صدر شیعہ علماءکونسل اسلام آباد ،سید نزاکت حسین نقوی ضلعی آرگنائزر شیعہ علماءکونسل راولپنڈی ، اورسید نیئر عباس نقوی ، سید فرید حسین شاہ سمیت دیگر بھی موجود تھے۔علامہ عارف حسین واحدی نے کہاکہ میڈیا کی جانب سے جس طرح محرم الحرام کے سلسلے میں مختلف پروگرامز کے ذریعے کوریج دی گئی اس پر ہم تمام صحافی برادری، میڈیا ہاو¿سز انتظامیہ کے مشکور ہیں۔علامہ عارف حسین واحدی کا مزید کہنا تھا کہ پوری دنیا میں سید الشہدا حضرت امام حسین ؑ اور ان کے جانثار ان کو اپنے اپنے انداز میں خراج عقیدت پیش کیا جارہاہے، مجالس، جلوس یا دیگر طریقے سے شہدائے کربلا کی یاد منانا ہر شہری کا بنیادی حق ہے لیکن اب جب ردالفساد کے نتیجے میں دہشتگردی کا خاتمہ ہو چکاہے اب کنٹینر ز اور قناتوں کو ہٹا کر آزادفضاﺅں میں عزاداری ہو نی چاہیے تا کہ لوگ بے خوف شرکت کرسکیں۔انہوں نے کہا کہ ریاست کا کام عوام کو سہولیات فراہم کرنا ہے نہ کہ ان کی عبادتوں میں رکاٹیں ڈالنا ، اس موقع پر انہوںنے کہا کہ ملک کے مختلف حصوں میں خصوصاً پنجاب میںمجالس اور روایتی جلوس میں بے جا رکاوٹیں ڈالی جاری رہی ہیں جو شہری آزادیوں کے ساتھ آئینی ،جمہوری اور بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے اس سلسلے میں کسی قسم کی رکاوٹ کھلی زیادتی ہے ،عوام آزاد ملک میں آزاد شہری کی طرح عزاداری سید الشہداءمنانا چاہتے ہیں اس میں رکاوٹیں قابل قبول نہیں ہیں ۔ علامہ عارف حسین واحدی نے وزیر اعظم پاکستان کی توجہ اس اہم مسئلہ کی جانب مبذول کراتے ہوئے کہا کہ سفیر امن ، قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی اس ملک میں وحدت کی علامت اور پہچان ہیں اگر آج ملک میں امن ہے تو علامہ ساجد نقوی کی مثبت پالیسیوں کی بدولت ہے ،ملک میں بھائی چارے کی فضا قائم و برقرار رکھنے کےلئے قائد ملت جعفریہ نے بھر پور کردار ادا کیا، بانی اتحاد بین المسلمین علامہ سیدساجد علی نقوی پرپنجاب کے مختلف اضلاع میں ، صوبہ سندھ اور گلگت بلتستان میں داخلہ پر پابندی خلاف آئین ہے جس کی پرزور مذمت کرتے ہیں اور مطالبہ کرتے ہیں پابندیاں فی الفور ختم کی جائیں۔آخر میں علامہ عارف واحدی نے کہا کہ آج انڈیا وقت کا یزید بن کر کشمیریوں پر ظلم ڈھا رہاہے ، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے عزادری کے جلوسوں پر بھی پابندی عائد کر دی ہے بھارتی فوج کے اس ظلم و تشدد کےخلاف سینہ سپر ہونے والے کشمیری مظلوم مسلمانوں پر ہمیں فخر ہے کہ انہوں نے سری نگر میں کرفیو کو توڑ کر بلاخوف لبیک یا حسین ؑ کی صداﺅں کو بلند کرتے ہوئے علم عباس اٹھا کر گھروں سے باہر نکلتے ہیں ان پر گولیاں بر سائی جارہی ہیں ۔لیکن یا د رکھو لبیک یاحسین ؑ یہی وہ نعرہ ہے جو طاغوت شکن ہے ہر طاغوت کو ان کے قوانین کو اپنے پاﺅں میں روند کر انشااللہ کشمیر آزاد ہوگا۔آخر میں علامہ عارف حسین واحدی نے حکومت س پاکستان سے مطالبہ کیا کہ پاکستان میں تمام شہریوں کی آزادی کا خیال رکھتے ہوئے قانون نافذ کرنے والے ادارے عزاداران اما م حسین علیہ السلام کو سہولیات فراہم کرتے ہوئے عزاداری کے راستوں میں بلاوجہ رکاوٹوں سے گریز کریں ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here