پاکستان میرا وطن ٗرول آف لاء ہمارا ماٹو ٗقیام امن ہماری ذمہ داری ہے ، قائدملت جعفریہ پاکستان علامہ ساجد نقوی
ہم شہری حقوق سے ددستبردار نہیں ہونگے اور نہ ہی عزاداری سید الشہداءؑ سے پیچھے ہٹیں گے، قائد ملت جعفریہ
ملک بھر سے لوگ گرفتار ہوئے ہیں مارے گئے ہیں ان کی اب تک شناخت نہیں ہوئی قوم کو بتایا جائے قائد ملت جعفریہ
Saturday 25 November 2017
جنوبی ایشیا کا امن مسئلہ کشمیر سے جڑا،بھارتی بھیانک چہرے کو عالمی دنیا کے سامنے بے نقاب کرنا ہوگا شیعہ علماء کونسل پاکستان
22406559_907595409365526_849989929621233042_n

شیعہ علماءکونسل کی ایل او سی پر بھارتی جارحیت کی مذمت ، انڈیا نے درندگی کی انتہاءکردی، عارف واحدی
جنوبی ایشیا کا امن مسئلہ کشمیر سے جڑا،بھارتی بھیانک چہرے کو عالمی دنیا کے سامنے بے نقاب کرنا ہوگا ، وفود سے گفتگو
اسلام آباد15 اکتوبر2017 ء( ) شیعہ علماءکونسل پاکستان کی ایل و سی پر بھارتی جارحیت کی شدید الفاظ میں مذمت،علامہ عارف واحدی کہتے ہیں مقبوضہ کشمیر میں بھارت نے درندگی کی انتہاءکردی ہے، ایل او سی پر بھارتی فائرنگ اور مقبوضہ کشمیر میں ہونیوالے مظالم پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ کشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت دیا جائے، بھارتی مظالم کےخلاف شدید رد عمل کی ضرورت، جنوبی ایشیاکا پائیدار امن بھی مسئلہ کشمیر سے جڑا ہے ، انتہائی تعجب کہ پوری دنیاکشمیر بارے بھارتی اقدامات کی مذمت کررہی ہے مگر وہ مسلسل کشمیر اور ایل او سی پر بے گناہ لوگوں کو نشانہ بنارہاہے ، بھارتی خفیہ ایجنسی کے ان دہشت گرد تنظیموں سے روابط جنہوں نے پاکستان میں آگ و خون کی ہولی کھلی اب ڈھکے چھپے نہیں رہے، پاکستان کو موثر سفارتکاری کے ذریعے سب سے بڑی جمہوریت کے دعویدارملک کے چہرے سے نقاب اتارنا چاہیے۔
ان خیالات کا اظہار انہوںنے گزشتہ روز ایل او سی پر بھارتی فوج کی فائرنگ پراپنے رد عمل میں کیا۔ علامہ عارف حسین واحدی نے کہاکہ بھارت مسلسل بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزیاں کررہاہے اور نہتے اور معصوم افراد کو نشانہ بنارہاہے،انہوںنے بھارتی فائرنگ کے نتیجے میں ہونیوالے جانی و مالی نقصان پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے جاں بحق ہونیوالے بچے کے خانوادہ سے اظہار تعزیت بھی کیا۔ علامہ عارف واحدی کا کہنا تھا کہ 1947ءسے اب تک مقبوضہ کشمیر میں بھارتی سفاکیت جاری ہے لیکن افسوس کشمیری عوام کی مظلومیت عالمی اداروں کو نظر نہیں آتی، انسانی حقوق ، اقوام متحدہ اور دیگر عالمی تنظیمیں کیوں خاموش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ چند ماہ میں سینکڑوں کشمیری ایک مرتبہ پھر شہید کردیئے گئے، پیلٹ گنزکے استعمال سے جوانوں کے ساتھ بزرگ شہریوں ، خواتین اور بچوں تک نشانہ بنایاگیا اور بینائی سے محروم کردیاگیا، یہاں تک کہ اب خواتین کے بال کاٹنے جیسے قبیح جرائم کے بھی بھارتی درندے مرتکب ہورہے ہیں لیکن کسی کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگی،، حکومت مسئلہ کشمیر کو مزید موثر انداز میں اٹھائے، کشمیریوں کی اخلاقی ، سیاسی اور سفارتی حمایت جاری رکھیںگے۔ان کا کہنا تھا کہ 70 سال سے ہندوستان مظلوم کشمیری عوام کو ریاستی جبر و تشدد اور ظلم کے پہاڑ تو ڑ کر زیر کرنے کی ناکام کوششیں کررہاہے لیکن کشمیریوں کا جذبہ آزادی کم ہونے کی بجائے مزید مضبوط اور بھرپور طریقے سے ابھر کر سامنے آیاہے اور یہ بھرپور عوامی جدوجہد کا روپ دھار چکاہے ،مسئلہ کشمیر کو کشمیری عوام کی امنگوں کے مطابق حل کیا جائے اور تمام فریقوں کو ان کی خواہشات کا احترام کرنا چاہیے،حکومت پاکستان کو بھی اس سلسلے میں بھرپور اور موثر انداز میں سیاسی، سفارتی اور اخلاقی جرات کا مظاہرہ کرنا ہوگا۔
انہوں نے مزید کہاکہ بھارتی خفیہ ایجنسیوں کی ان دہشت گردگروپوں کے روابط اب ڈھکے چھپے نہیں رہے جنہوںنے پاکستان کو آگ و خون میں نہلایا، خود بھارتی میڈیا بھی اس کا گواہ ہے، پاکستان کو موثر سفارتکاری کے ذریعے سب سے بڑی جمہوریت کے دعویدار ملک کے چہرے سے نقاب ہٹانا ہوگا اور دنیا کو بتانا ہوگا کہ ہندوستان کشمیر میں ظلم و سفاکیت کے ساتھ ساتھ پاکستان کی خود مختاری کےخلاف بھی سازشیں کررہاہے۔

Comments

اس خبر کے متعلق آپ کی رائے
متعلقہ خبریں

Featuring Top 10/497 of ملک بھر سے