کروناوائرس عالمی وبا، تمام ممالک مل کراِس وباکامقابلہ کریں،شیعہ علماءکونسل پاکستان
کروناوائرس عالمی وبا، تمام ممالک مل کراِس وباکامقابلہ کریں،شیعہ علماءکونسل پاکستان

کروناوائرس عالمی وبا، تمام ممالک مل کراِس وباکامقابلہ کریں،شیعہ علماءکونسل پاکستان
زائرین کی مشکلات بارے صدرمملکت سمیت اعلیٰ حکام کوآگاہ کرچکے، مطلوبہ اقدامات کے تاحال منتظر،عارف واحدی

اسلام آباد 12مارچ2020ئ( جعفریہ پریس   )شیعہ علماءکونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی کہتے ہیں کہ کوروناوائرس عالمی وبابن چکاہے، اس وائرس کامقابلہ تمام ممالک کومل کرکرناہوگا۔صورتحال سے نمٹنے کے میکنزم کوموثراوربہتربنایا جائے اورعوام کووائرس کے خطرات سے آگاہ کیاجائے ۔قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سیدساجدعلی نقوی کے بیان کے مطابق روایتی اندازسے ہٹ کر سنجیدہ کاوشیں وقت کی ضرورت ہیں۔افسوس تفتان بارڈرپرجن منظم ہنگامی اقدامات کی ضرورت تھی ابھی تک وہ نہیں اُٹھائے گئے۔

اِن خیالات کااظہاراُنہوں نے ملک میں پھیلتے وائرس اورتفتان بارڈرکی تازہ صورتحال پرذمہ داران کی توجہ مبذول کراتے ہوئے کیاکہ بارڈرپرخیموں اورعارضی قیام گاہوں میں موجودزائرین کسمپرسی کی حالت میں ہیں،رضائیوں کی قلت ہے، ٹوائلٹس تنگ، نامناسب اورتعدادمیں کم ہیں۔ مثال کے طورپر270افرادکیلئے صرف 4ٹوائلٹس ہیںاورکچھ افرادکوتوگیراج میں ٹھہرایاگیاہے۔سیکرٹری جنرل نے کہاکہ قائدملت جعفریہ پاکستان کی ہدایت پرصدرمملکت سمیت اہم ترین وزراءاورذمہ داران سے ملاقاتیں کیںاور پیغامات پہنچائے کہ زائرین کے مسائل کے قابل ِقبول اورمناسب حل کیلئے روایتی اندازسے ہٹ کرسنجیدہ کوششوں کی اشد ضرورت ہے ،جس سے آسانیاں پیداکی جاسکتی ہیں۔اُنہوں نے قائدملت جعفریہ پاکستان علامہ ساجد علی نقوی کے بیان کاحوالہ دیتے ہوئے کہاکہ پاک ایران بارڈرپربزنس ویزہ کے حامل افراد کی ایران آمدورفت پرکوئی میڈیکل چیک اپ ہورہاہے نہ ہی اُنہیں بارڈر پرقرنطینہ میں رکھاجارہاہے نیز غیرقانونی افرادکی ایران وپاکستان آمدورفت بھی پہلے کی طرح جاری وساری ہے ۔جبکہ زائرین کو روک رکھا ہے اوران کی روانگی کا پروگرام بھی نہیں دیا جا رہا یہ دہرامعیار اورامتیاز،خلاف آئین وقانون ہے جس کاتدارک ضروری ہے۔
علامہ عارف حسین واحدی نے کہاکہ تفتان بارڈرسمیت تمام ایئرپورٹس پرانتظامات کومزیدوائرس پروف بنایاجائے،وباسے نمٹنے کے میکنزم کوموثراوربہتربنایاجائے ،عوام کووائرس کے خطرات سے آگاہ کیاجائے اوربتایاجائے کہ لوگ اپنے آپ کواِس موذی وائرس سے کیسے محفوظ رکھ سکتے ہیں تاکہ وطن ِعزیز اِس وائرس کے پھیلاﺅاورنقصان سے محفوظ رہ سکے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here