کورونا وائرس بین الاقوامی انسانی المیہ، یہ وبائی مرض ہے اجتماعات سے گریز کریں، مخیر حضرات آگے آئیں علامہ ساجد نقوی
کورونا وائرس بین الاقوامی انسانی المیہ، یہ وبائی مرض ہے اجتماعات سے گریز کریں، مخیر حضرات آگے آئیں علامہ ساجد نقوی

کورونا وائرس بین الاقوامی انسانی المیہ، یہ وبائی مرض ہے اجتماعات سے گریز کریں، مخیر حضرات آگے آئیں علامہ ساجد نقوی

اجتماعات سے گریز کریں، مخیر حضرات آگے آئیں، قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ ساجد نقوی
 تعاون کےلئے تیار ، ذمہ دار اور رضا کار میدان میں موجو د ، مشکل وقت میں ضرور سرخرو ہونگے

  اسلام آباد24مارچ 2020ء ( جعفریہ پریس) قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی کہتے ہیں کورونا وائرس بین الاقوامی انسانی المیہ ہے اوریہ وبائی مرض ہے،جس نے 195 ممالک کو اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے، اس معاملے پر متحد ہوکر نمٹنے کی ضرورت ہے، اجتماعات سے گریز کرتے ہوئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں، لاک ڈاﺅن کے دوران غرباءو مساکین اور مزدور طبقے کاخصوصی خیال رکھا جائے ، مخیر حضرات بھی آگے آئیں ۔

قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی کا کہنا تھاکہ پاکستان میں اس وائرس کے پھیلاﺅ کے اسباب مختلف ہیں۔ بین الاقوامی ہوائی اڈو ں پر اسکریننگ کے بہتر انتظامات نہ ہوسکے ، عمرہ سمیت دیگر مصروفیات کے بعد وطن واپس آنیوالے افراد کو کسی بھی وجہ سے ائرپورٹ سے گھر جانے دیا گیا اسی طرح ایران سے تفتان کے ذریعے واپس آنیوالے زائرین اور کاروباری حضرات کو ایک جگہ اکٹھا کیا گیااور مناسب اقدامات نہ اٹھائے جاسکے جس کے باعث صحت مندافراد میں بھی اس وائرس کے خدشات بڑھے جبکہ فیصل آباد سنٹر میں منتقل کیے جانے والے افراد تمام کے تمام زائرین نہیں ہیں بلکہ ان میں سے 100کے قریب افراد غیر قانونی طور پر سرحد پار کرنے والے ڈی پورٹ شدہ افراد ہیں۔ علاوہ ازیں تبلیغی جماعت کے ہزاروں کے اجتماع کو یکدم ختم کرنے کے ساتھ سکریننگ وغیرہ کسی اقدام کے بغیر ہی گھروں کو جانے دیاگیا جو پورے ملک میں پھیل گئے جس کی وجہ سے کورونا کے خدشات بڑھے چنانچہ اسلام آباد کے نواحی علاقے میں کیس رپورٹ ہوئے،انہوں نے کہا کہ اس موقع پر مخیر حضرات کو بھی اس حوالے سے اپنا کردار ادا کرنا ہوگا ، اپنے ارد گرد غربا، مساکین اور مزدور طبقے کاخصوصی خیال رکھا جائے، اشیائے ضروریہ کے ساتھ ماسکس ،سینیٹائزرز وغیرہ غریبوں کو عطیہ کر کے ان کے گھروں تک پہنچائے جائیں ، عوام اجتماعات سے گریز کرتے ہوئے احتیاطی تدابیر اختیا رکریں،پاکستان انشاءاللہ اس مشکل وقت میں سروخرو ہوگا، اس حوالے انہوںنے اپنے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ مکمل تعاون کےلئے تیار ہیں ذمہ دار اور رضا کار امدادی سرگرمیوں میں مصروف عمل ہیں ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here