• تعلیم یافتہ نسل ، ملک و قوم کی ترقی کی ضمانت ہے، علامہ ڈاکٹر شبیرحسن میثمی
  • کوئٹہ میں ہونے والی دہشتگردی کی مذمت کرتے ہیں شیعہ علماء کونسل پاکستان
  • علامہ شبیر حسن میثمی کا علامہ سید علی حسین مدنی کے کتابخانہ کا دورہ
  • مفتی رفیع عثمانی کی وفات سے علمی حلقوں میں خلاء پیدا ہوا علامہ شبیر حسن میثمی
  • مسئول شعبہ خدمت زائرین ناصر انقلابی کا دورہ پاکستان
  • علامہ عارف واحدی کا سید وزارت حسین نقوی اور شہید انور علی آخوندزادہ کو خراجِ تحسین / دونوں عظیم شخصیات قومی سرمایہ تھیں
  • علامہ شبیر میثمی کی وفد کے ہمراہ علامہ افتخار نقوی سے ملاقات
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے وفد کی مفتی رفیع عثمانی کے فرزند سے والد کی تعزیت
  • سید ذیشان حیدر بخاری متحدہ طلباء محاذ کے مرکزی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے ۔
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے اعلی سطحی وفد کی پرنسپل سیکرٹری وزیر اعظم پاکستان سے تعزیت

تازه خبریں

جب تک دہشت گردوں کو احترام دینے کی بجائے ان پر آہنی ہاتھ نہیں ڈالا جائے گا اس وقت ملک میں امن کا خواب شرمندہ تعبیر کیسے ہوگا

شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی نے کہا کہ ملک میں کسی کی جان محفوظ نہیں ہے۔ جب تک دہشت گردوں اور قاتلوں کو کیفر کردار تک نہیں پہنچایا جائیگا اس وقت تک امن قائم ہونا ممکن نہیں اگر ریاست ہی مجرموں کو محترم سمجھے گی تو شہریوں کا محافظ کون ہوگا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایف سی کی 23اہلکاروں کی شہادت کے واقعہ کی شدیدا لفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کیا۔جبکہ گذشتہ روز پولیو ٹیم کے اغواء اور میڈیا دفاتر پر ہونے والے دہشت گردی کے حملوں پر بھی افسوس کو اظہار کیا اور کہا کہ ملک میں صحافی ، وکلاء سیکورٹی اہلکار ، ججز ،علماء ،بے یارو مدد گار مسافر اور عبادت گاہوں میں مصروف لوگوں کو تحفظ حا صل نہیں ۔انہوں نے کہا کہ جب تک ریاست کی رٹ کو بحال نہیں کیا جاتااور مجرموں ،قاتلوں اور دہشت گردوں کو احترام دینے کی بجائے ان پر آہنی ہاتھ نہیں ڈالا جائے گا اس وقت ملک میں امن کا خواب شرمندہ تعبیر کیسے ہوگا۔
علامہ عارف حسین واحدی نے مزید کہا کہ دہشت گردسر عام دندناتے پھر رہے ہیں اور سر عام ریاستی رٹ کو چیلنج کیا جا رہا ہے جب تک حکومت اس معاملے پر سنجیدہ اقدامات نہیں اٹھاتی اور جزا ء سزا کا عمل شروع نہیں کیا جاتااس وقت تک قوم میں اضطراب رہے گا اور بے گناہ عوام کے قتل عام کا سلسلہ بھی جاری رہے گااس لئے حکومت کو کسی تاخیر کے بجائے فی الفور قاتلوں اور دہشت گردوں کے خلاف قدم اُٹھانا ہوگا اور دہشت گردی کو اس کی جڑ سے اکھاڑ پھینکنا ہو گا تبھی پاکستان صیح معنوں میں فلاحی و جمہوری ریاست کے طور پر دنیا کے نقشے پر اُبھر سکتا ہے ۔آخر میں انہوں نے ایف سی اہلکاروں کی درجات کی بلندی اور لواحقین کے لئے صبرو جمیل کی دعاکی ۔