• مفتی رفیع عثمانی کی وفات سے علمی حلقوں میں خلاء پیدا ہوا علامہ شبیر حسن میثمی
  • مسئول شعبہ خدمت زائرین ناصر انقلابی کا دورہ پاکستان
  • علامہ عارف واحدی کا سید وزارت حسین نقوی اور شہید انور علی آخوندزادہ کو خراجِ تحسین / دونوں عظیم شخصیات قومی سرمایہ تھیں
  • علامہ شبیر میثمی کی وفد کے ہمراہ علامہ افتخار نقوی سے ملاقات
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے وفد کی مفتی رفیع عثمانی کے فرزند سے والد کی تعزیت
  • سید ذیشان حیدر بخاری متحدہ طلباء محاذ کے مرکزی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے ۔
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے اعلی سطحی وفد کی پرنسپل سیکرٹری وزیر اعظم پاکستان سے تعزیت
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کی نواب شاہ میں پریس کانفرنس
  • اپنے تنظیمی نظام اور سسٹم کو مضبوط سے مضبوط کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ ورکر کنونشن
  • مفتی رفیع عثمانی کی وفات علمی حلقوں میں خلا مشکل سے پُر ہوگا علامہ شبیر میثمی

تازه خبریں

حالات خراب کرنے کی سازش کی جا رہی ہے جسے پہلے کی طرح اب بھی ہماری قیادت سیاسی تدبر اور اتحاد کے ساتھ ناکام کردے گی، علامہ عارف حسین واحدی

جعفریہ پریس – شیعہ علماءکونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی نے کہا ہے کہ ملک میں کوئی مذہبی تفریق نہیں ، حالات خراب کرنے کی سازش کی جا رہی ہے جسے پہلے کی طرح اب بھی ہماری قیادت سیاسی تدبر اور اتحاد کے ساتھ ناکام کردے گی، سیاسی مسائل بات چیت سے ہی حل ہوتے ہیں، فریقین اپنے موقف میں نرمی پیدا کریں، سیلاب متاثرین امداد میں کوئی کسر اٹھا نہیں رکھیںگے، مخیر حضرات بھی زیادہ سے زیادہ آگے آئیں۔
جمعرات کو سیلاب متاثرہ علاقوں کے دورئہ پر جانے سے قبل صحافیوں کو بریفنگ دیتے ہوئے علامہ عارف حسین واحدی نے کہا کہ قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجدعلی نقوی کے حکم کے بعد حالیہ تباہ کن سیلابی صورتحال میں امدادی کارروائیاں فوراً شروع کردی ہیں اوراب تک لاکھوں مالیت کا سامان بھی متاثرین میں بلا تفریق تقسیم کرچکے ہیں جبکہ امدادی کاموں کا جائزہ لینے کےلئے آج سے متاثرہ علاقوں کے دورہ پر جا رہا ہوں۔ انہوں نے حالیہ ٹارگٹ کلنگ کے واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ایک مرتبہ پھر سازش کے تحت حالات خراب کرنے کی کوشش کی جارہی ہے البتہ ہم واضح کردینا چاہتے ہیں کہ پاک سرزمین پر نہ مذہبی تفریق ہے اور نہ ہی ہمارا معاشرہ اس کی اجازت دے گا اور اس طرح کا بگاڑ پیدا کرنے والوں کو پہلے کی طرح اب بھی ہماری قیادت سیاسی تدبر اور اتحاد کی طاقت کے ساتھ ناکام کردے گی۔ انہوں نے سیاسی بحران پر سوال کے جواب میں کہا کہ مسائل ہمیشہ بات چیت سے حل ہوتے ہیں سیاست میں کچھ بھی حرف آخر نہیں ہوتا فریقین اپنے موقف میں نرمی پیدا کریں اور متاثرین سیلاب و متاثرین ضرب عضب کی مدد کےلئے آگے آئیں۔