• ایران اور سعودی عرب کے درمیان سفارتی تعلقات کی بحالی وقت کی ضرورت ھے۔علامہ عارف واحدی
  • اسلامی تحریک پاکستان کا صوبائی ا نتخابات میں بھرپور حصہ لینے کا اعلان
  • جامعہ جعفریہ جنڈ کے زیر اہتمام منعقدہ عظیم الشان نہج البلاغہ کانفرنـــــس
  • سانحہ پشاور مجرموں کی عدم گرفتاری حکومتوں کی ناکامی کا منہ بولتا ثبوت ہے، ترجمان قائد ملت جعفریہ ہاکستان
  • سانحہ بسری کوہستان !عشرہ گزر گیا مگر قاتل پکڑے گئے نہ مظلومین کو انصاف ملا،
  • راہِ حسین(ع) پر چلنے کیلئے شہداء ملت جعفریہ نے ہمیں بے خوف بنا دیا ہے۔علامہ شبیر حسن میثمی
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان سندھ کے زیر اہتمام کل شہدائے سیہون کی برسی کا اجتماع ہوگا
  • شہدائے سیہون شریف کی برسی میں بھرپور شرکت کو یقینی بنائیں علامہ شبیر حسن میثمی
  • ثاقب اکبر کی وفات پر خانوادے سے اظہار تعزیت کرتے ہیں علامہ عارف حسین واحدی
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کی ثاقب اکبر کے انتقال پر تعزیت

تازه خبریں

پشاور پولیس لائن کی مسجد میں ہونے والے خودکش دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہیں۔علامہ محمد رمضان توقیر

پشاور پولیس لائن کی مسجد میں ہونے والے خودکش دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہیں۔علامہ محمد رمضان توقیر
ڈیرہ اسماعیل خان( جعفریہ پریس پاکستان)شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی نائب صدر علامہ محمد رمضان توقیر نے پشاور خودکش دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ کافی تعداد میں پولیس اہلکار شہید ہوئے ہیں۔ درجنوں انسانی قیمتی جانوں کے ضیاع پر دلی افسوس ہوا ہے۔
اتنی سخت سیکورٹی زون میں خودکش کا داخل ہو کر بلاسٹ کرنا کافی حیران کن ہے۔
ایک اور مسجد میں دھماکہ سے واضح ہوتا ہے کہ دہشت گردوں کا کسی مذہب،مسلک اور انسانیت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔دہشت گردوں کا صرف ایک ہی مقصد ہے دہشت گردی و قتل و غارت کرنا ان کے نزدیک کوئی مسجد،مسلک قابل تعظیم نہیں۔
کتنی سفاکیت سے نماز میں مشغول مسلمان کو دہشت گردانہ کاروائی کرکے شہید کر دیا ہے۔
پورا ملک بلخصوص خیبر پختونخواہ دہشت گردوں کے نشانے پر ہے۔کافی عرصے سے سے ڈیرہ اسماعیل خان پشاور،لکی مروت،ٹانک اور شمالی علاقہ جات میں پولیو ٹیمز، پولیس اسٹیشنز،پولیس چوکیاں اور دیگر سیکورٹی فورسز اور سیکورٹی اداروں پر حملے کئے گئے۔حساس اداروں کی ناقص سیکورٹی خود سیکورٹی اداروں کی کارکردگی اور ملکی سیکورٹی صورتحال پر سوالیہ نشان ہے۔اس قسم کے واقعات کے سدباب کے لئے حکومت اور سیکورٹی اداروں کےلئے سخت فیصلے اور سخت اقدامات کرنا ناگزیر ہو گیا ہے۔
حکومتی ادارے،تحقیقاتی ادارے،اور سیکورٹی فورسز سے مطالبہ کرتے ہیں کہ اس دہشت گردی کے واقعہ میں ملوث ملزمان و سہولت کاروں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔تاکہ آئندہ اس قسم واقعات سے عوام کے جانی و مالی نقصان کا تحفظ ممکن ہو۔عوام کے جان و مال کی حفاظت ریاست کی ذمہ داری ہے۔
شہداء کےلئے مغفرت اور زخمیوں کی جلد از جلد صحت یابی کیلئے دعا گو ہیں۔