• تعلیم یافتہ نسل ، ملک و قوم کی ترقی کی ضمانت ہے، علامہ ڈاکٹر شبیرحسن میثمی
  • کوئٹہ میں ہونے والی دہشتگردی کی مذمت کرتے ہیں شیعہ علماء کونسل پاکستان
  • علامہ شبیر حسن میثمی کا علامہ سید علی حسین مدنی کے کتابخانہ کا دورہ
  • مفتی رفیع عثمانی کی وفات سے علمی حلقوں میں خلاء پیدا ہوا علامہ شبیر حسن میثمی
  • مسئول شعبہ خدمت زائرین ناصر انقلابی کا دورہ پاکستان
  • علامہ عارف واحدی کا سید وزارت حسین نقوی اور شہید انور علی آخوندزادہ کو خراجِ تحسین / دونوں عظیم شخصیات قومی سرمایہ تھیں
  • علامہ شبیر میثمی کی وفد کے ہمراہ علامہ افتخار نقوی سے ملاقات
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے وفد کی مفتی رفیع عثمانی کے فرزند سے والد کی تعزیت
  • سید ذیشان حیدر بخاری متحدہ طلباء محاذ کے مرکزی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے ۔
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے اعلی سطحی وفد کی پرنسپل سیکرٹری وزیر اعظم پاکستان سے تعزیت

تازه خبریں

اسرائیلی فوج کی وحشیانہ جارحیت کیخلاف شیعہ علماء کونسل پاکستان شعبہ خواتین کی جانب سے موسلا دھار بارش کے باوجود اقوام متحدہ کے آفس سرینا ہوٹل کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا

جعفریہ پریس اسلام آباد07 اگست 2014ء ( )غزہ میں مظلوم بچوں ، بوڑھوں اور خواتین سمیت فلسطینیوں کیخلاف جاری اسرائیلی فوج کی وحشیانہ جارحیت کیخلاف شیعہ علماء کونسل پاکستان شعبہ خواتین کی جانب سے موسلا دھار بارش کے باوجود اقوام متحدہ کے آفس سرینا ہوٹل کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا۔ جس میں سینکڑوں خواتین اور بچے شامل تھے۔ احتجاجی مظاہرے کی قیادت شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی ، مولانا غلام قاسم جعفری ضلعی صدر راولپنڈی، ملک تنویر عباس ، قائم مقام ضلعی صدر اسلام آباد اور مولانا فرحت عباس جوادی نے کی۔ اس موقع پر علامہ عارف حسین واحدی مرکزی سیکرٹری جنرل نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ غزہ کی عوام پر اسرائیلی جارحیت پر شدید احتجاج کرتے ہیں۔ اقوام متحدہ ہمیشہ فلسطین کے مظلوم عوام کے بنیادی انسانی حقوق کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام رہی ہے اور یہ تنظیم جارح اور اپنے دفاع میں لڑنے والوں کے درمیان تمیز کرنے میں ناکام رہی ہے۔دوسری طرف اپنے اصلی مالکوں کو خوش کرنے کیلئے یہ کبھی کبھی ظالم کی طرف سے احتساب جرائم کیلئے مظلوم لوگوں کو مورد الزام ٹھہراتی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ فلسطین انسانی ضمیر پر ایک اذیت ناک زخم ہے۔ اور کشمیر کی طرح اب بھی یہ اقوام متحدہ کی توجہ اپنی طرف مبذول کرانے کی کوشش میں ہے۔ فلسطینی عوام پر کیے جانے والے ظلم اور جبر نا صرف امت مسلمہ کیخلاف بلکہ پوری انسانیت پر مظالم کے مترادف ہے۔ آخر میں انہوں نے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ عالمی ادارہ اپنی اخلاقی اور انسانی ذمہ داریوں کو پورا کرتے ہوئے اسرائیل کی طرف سے ان جارحانہ اقدامات کو روکنے میں مدد کرے۔ اقوام متحدہ اسرائیل کو جارح مانتے ہوئے اس کے وحشیانہ طرز عمل کی مذمت کرے اور جابرانہ ریاست کی طرف سے عدم تعاون کی صورت میں اقوام متحدہ کے ساتھ منسلک تمام ممالک اسرائیل کے ساتھ اپنے سفارتی تعلقات کو ختم کردیں۔ انہوں نے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ غزہ کا محاصرہ فوری طور پر اٹھا لیا جائے اور اقوام متحدہ ایک کمیشن بنائے۔ جو غزہ میں صیہونی ریاست کی طر ف سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور جنگی جرائم کی تحقیقات کرے۔ فلسطینی بھائیوں کی طرف سے ہم اقوام متحدہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ یہ عالمی ادارہ اپنے وسائل کو بروئے کار لاتے ہوئے فلسطینیوں پر روا رکھے جانے مظالم کو فوری طورپر بند کروائے۔ بعد ازاں علامہ عارف حسین واحدی نے اپنے وفد کے ہمراہ اقوام متحدہ آفس جا کر فلسطینی بھائیوں اور غزہ کی مظلوم عوام سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے یاد داشت جمع کروائی۔