• تعلیم یافتہ نسل ، ملک و قوم کی ترقی کی ضمانت ہے، علامہ ڈاکٹر شبیرحسن میثمی
  • کوئٹہ میں ہونے والی دہشتگردی کی مذمت کرتے ہیں شیعہ علماء کونسل پاکستان
  • علامہ شبیر حسن میثمی کا علامہ سید علی حسین مدنی کے کتابخانہ کا دورہ
  • مفتی رفیع عثمانی کی وفات سے علمی حلقوں میں خلاء پیدا ہوا علامہ شبیر حسن میثمی
  • مسئول شعبہ خدمت زائرین ناصر انقلابی کا دورہ پاکستان
  • علامہ عارف واحدی کا سید وزارت حسین نقوی اور شہید انور علی آخوندزادہ کو خراجِ تحسین / دونوں عظیم شخصیات قومی سرمایہ تھیں
  • علامہ شبیر میثمی کی وفد کے ہمراہ علامہ افتخار نقوی سے ملاقات
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے وفد کی مفتی رفیع عثمانی کے فرزند سے والد کی تعزیت
  • سید ذیشان حیدر بخاری متحدہ طلباء محاذ کے مرکزی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے ۔
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے اعلی سطحی وفد کی پرنسپل سیکرٹری وزیر اعظم پاکستان سے تعزیت

تازه خبریں

جے ایس او پاکستان کے مرکزی نائب صدر وفا عباس 8 روزہ دورہ پر کراچی پہنچ گئے ، سندھ کے مختلف علاقوں کا تفصیلی دورہ کریں گے

جعفریہ پریس – جعفریہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی نائب صدر وفا عباس مرکزی صدر ساجد علی ثمر کی ہدایت پر اپنے 8 روزہ تنظیمی دورہ پر کراچی پہنچ گئے ہیں۔جے ایس او پاکستان کے مرکزی نائب صدر سندھ کے مختلف علاقوں کا تفصیلی دورہ کریں گے اور عہدے داران و کارکنان سے ملاقاتیں کر کے ان کے مسائل سنیں گے اور ایک تفصیلی رپورٹ بنا کر مرکز کو ارسال کریں گے۔
اپنے اس 8 روزہ دورہ سندھ کے دوران وہ کراچی ،حیدر آباد،ٹنڈو اللہ یار،دادو اور لاڑکانہ ڈویژنز کا دورہ کریں گے۔ آج کراچی میں انہوں نے جے ایس او پاکستان کی مرکزی مجلس نظارت کے مستقل رکن اور جے ایس او پاکستان کے سابقہ مرکزی صدر منور عباس ساجدی صاحب سے ملاقات کی اور ان کو تنظیم کی موجودہ صورت حال پر بریفنگ دی۔
اس موقع پربرادر وفا عباس نے منور عباس ساجدی صاحب کے ساتھ ملکی صورت حال پر گفتگو کے دوران کہا کہ ہم نوجوان اس بات کا ادراک رکھتے ہیں کہ اس ملک کو ترقی کی راہ میں لانے کے لیے ہمیں کلیدی کردار ادا کرنا ہو گا۔موجودہ سیاسی نظام اس قابل نہیں ہے کہ وہ پاکستان کو ایک ترقی یافتہ ملک بنا سکے۔وفا عباس کا مزید کہنا تھا کہ ہم تنظیمی نوجوانوں کی اس طرح تربیت کر رہے ہیں کہ یہ تمام نوجوان مستقبل میں اس ملک کا ایک قیمتی اثاثہ ثابت ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ وہ وقت دور نہیں کہ جب پاکستان کے تمام اہم اداروں کی باگ ڈور جے ایس او پاکستان کے تربیت یافتہ نوجوانوں کے ہاتھ میں ہو گی۔