• مفتی رفیع عثمانی کی وفات سے علمی حلقوں میں خلاء پیدا ہوا علامہ شبیر حسن میثمی
  • مسئول شعبہ خدمت زائرین ناصر انقلابی کا دورہ پاکستان
  • علامہ عارف واحدی کا سید وزارت حسین نقوی اور شہید انور علی آخوندزادہ کو خراجِ تحسین / دونوں عظیم شخصیات قومی سرمایہ تھیں
  • علامہ شبیر میثمی کی وفد کے ہمراہ علامہ افتخار نقوی سے ملاقات
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے وفد کی مفتی رفیع عثمانی کے فرزند سے والد کی تعزیت
  • سید ذیشان حیدر بخاری متحدہ طلباء محاذ کے مرکزی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے ۔
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کے اعلی سطحی وفد کی پرنسپل سیکرٹری وزیر اعظم پاکستان سے تعزیت
  • شیعہ علماء کونسل پاکستان کی نواب شاہ میں پریس کانفرنس
  • اپنے تنظیمی نظام اور سسٹم کو مضبوط سے مضبوط کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ ورکر کنونشن
  • مفتی رفیع عثمانی کی وفات علمی حلقوں میں خلا مشکل سے پُر ہوگا علامہ شبیر میثمی

تازه خبریں

شہید سید ضیاالدین رضوی اور اُن کے با وفا ساتھی کی دس ویں برسی قائد ملت جعفریہ کا ٹیلیفونک خطاب

جعفریہ پریس – شہید اسلا م و قرآن علامہ سید ضیاالدین رضوی اور اُن کے با وفا ساتھی شہدا کی دس ویں برسی کے سلسلے میں ایک عظیم الشان پروگرام رہائش گاہ شہہید رضوی امپھری گلگت میں منقد ہوا  ۔ بر سی کے پروگرام میں کثیر تعداد میں شہید رضوی کے عقیدت مندوں کی شرکت شہید آغا سید ضیا الدین رضوی کی برسی سے قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے ایران سے  ٹیلیفونک خطاب کیا  قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے جید عالم دین اور گلگت بلتستان کی معروف اور متحرک مذہبی و سماجی شخصیت علامہ سید ضیاء الدین رضوی کی 10 ویں برسی کے موقع پر اپنے ٹیلی فونک خطاب میں کہا ہے کہ شہید کی فکر اور مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لئے عملی جدوجہد کرنے کی ضرورت ہے ۔شہید رضوی نے گلگت بلتستان کے عوام کی سیاسی حقوق ، معاشرتی حقوق ، سماجی حقوق ، تعلیمی حقوق کے لیے بھر پور جدوجہد کی جو کہ ہم سب لے لیے مشعل راہ ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ عالمی اور ملکی مسائل پر شہید کا جو کردار رہا اُس کو ہم کبھی بھی فراموش نہیں کرسکتے ہیں ۔ نصاب تعلیم کے حوالے سے آغا ضیاء الدین کی جدوجہد جاری ہے جس کے لیے سب کو ملکر کام کرنے کی ضرورت ہے ۔ 
انہوں نے مزید کہا کہ دہشت گردی اور ٹارگٹ کلنگ کی لعنت نے ملک کی چولیں ہلاکررکھ دیں‘ سال 2015 کا بڑا سانحہ گذشتہ روز چٹیاں ہٹیاں راولپنڈی میں محفل میلاد پر خود کش حملہ ہے جس میں سات معصوم اور قیمتی جانیں لقمہ اجل بن گئیں، عوام کے پاس اس ظلم و بربریت اور کھلی درندگی کے خلاف پرامن انداز میں قصدائے احتجاج کے علاوہ کوئی راہ نہیں مگر ریاست اور امن و امان کے ذمہ داروں کی جانب سے متاثرہ عوام کے زخموں پر مرہم رکھنے کے لئے ابھی بہت کچھ کرنا باقی ہے۔
علامہ ساجد نقوی نے کہا کہ ایک مدت سے منظم انداز میں جاری قتل و غارتگری ‘ دہشت گردی اور ٹارگٹ کلنگ کے شکا رعوام یہ جاننے کا حق رکھتے ہیں کہ آخر یہ دہشت گرد اور قاتل اتنے قوی کیسے ہوگئے کہ جب چاہیں اور جہاں چاہیں سرکاری‘نجی عمارتوں ‘ بازاروں‘ مزارات اور معصوم لوگوں کے خون سے ہولی کھیلنا شروع کردیتے ہیں ۔
قائد ملت جعفریہ پاکستان نے علامہ سید ضیاء الدین رضوی کی مذہبی‘ ملی اور قومی خدمات کو زبردست الفاظ میں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ان کی جدوجہد کو جاری رکھنے کی ضرورت پر زور دیا شہید مظلوم کی برسی سے حجت السلام علامہ شیخ مرزا علی نگری نے اور علامہ راحت حسین الحسنی  بھی خطاب کیا