امن کےلئے اقوام متحدہ ، قائدانہ و قاطعانہ کردار ادا کرے ،قائد ملت جعفریہ علامہ ساجد نقوی

امن کےلئے اقوام متحدہ ، قائدانہ و قاطعانہ کردار ادا کرے ،قائد ملت جعفریہ علامہ ساجد نقوی
وطن کا دفاع و تحفظ ریاست کے ساتھ ہر فرد کی ذمہ داری ہے، قائد ملت جعفریہ پاکستان

 امن ڈے مختص کرنے سے دنیا میں امن قائم نہیں ہوگا، اقوام متحدہ مصلحت ترک کرے اوردنیا کے امن کیلئے کر دار ادا کرے

راولپنڈی / اسلام آباد 27 مئی 2021ء (  جعفریہ پریس پاکستان    ) قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے صدر جنرل اسمبلی اقوام متحدہ کو پاکستان آمد پر خوش آمدید کہتے ہوئے کہاکہ دنیا کے امن کےلئے اقوام متحدہ کو قائدانہ و قاطعانہ کردار ادا کرنے کی ضرورت ہے، یو این او ایسا متفقہ پلیٹ فارم ہے جسے بنیادی انسانی حقوق اور دنیا کے امن کےلئے کردار ادا کرنا تھا ، افسوس مصلحت پسندی و طاقت ور ریاستوں کے باعث یہ کردار ادا نہ ہوسکا، صرف امن مشنز کا دن منانے سے دنیا میں امن قائم نہیں ہوسکتا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے صدر جنرل اسمبلی اقوام متحدہ وولکان بوزکیرکی پاکستان آمد ، اقوام متحدہ کی جانب سے29مئی کو عالمی امن پسندی اور یوم تکبیر پر پیغام میں کیا۔ قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے کہاکہ اپنے وطن کا دفاع اور تحفظ ریاست کے ساتھ ہر فرد کی بھی ذمہ داری ہے، یوم تکبیر بھی اس حوالے سے اہم ذمہ داریوں کی طرف متوجہ کرتاہے۔ انہوںنے صدر جنرل اسمبلی اقوام متحدہ وولکان بوزکیر کی پاکستان آمد کے موقع پر کہاکہ جنرل اسمبلی کے صدر ایسے موقع پرپاکستان آرہے ہیں جب ایک طرف اقوام متحدہ کی جانب سے 1948 ءکے اعلان کردہ امن پسندوں کے عالمی دن (پیس کیپر ڈے)منایا جارہے مگر افسوس آج بھی کشمیر و فلسطین میں امن نہیں، کشمیر و فلسطین کے عوام ہندوتوا و صہیونی انتہاءپسندانہ نظریات و بیانیہ کا شکار بن رہے ہیں، اقوام متحدہ جسے بنیادی انسانی حقوق اور دنیا کے امن کےلئے قائدانہ وقاطعانہ کردار ادا کرنا تھا افسوس مصلحت پسندی و طاقت ور ریاستوں کے اثرو رسوخ کی نذر ہوگیا اسی وجہ سے آج دنیا کے کمزور مسلم و غیر مسلم ریاستیں ظلم و ستم ، جارحیت اور استعماریت کا شکار ہیں۔ انہوں نے کہاکہ صرف ایام مختص کرنے سے آگہی تو فراہم کی جاسکتی ہے مگر پائیدار امن کےلئے عملی اقدامات ضروری ہیں بصورت دیگرصورتحال گزرتے وقت کے ساتھ بگڑتی جائےگی۔