سوچی سے نوبل ایوارڈ واپس لیے جانے کےمطالبے میں تیزی

میانمار کی رہنما آنگ سان سوچی سے نوبیل انعام واپس لینے کے لیے بین الاقوامی سطح پر اٹھنے والی آوازیں زور پکڑتی جا رہی ہیں اور برطانیہ میں گارڈین سمیت کئی مقتدر اخبارات نے روہنگیا مسلمانوں پر بہیمانہ ریاستی مظالم پر آنگ سان سوچی کے موقف پر مضامین شائع کیے ہیں اور سوچی کے موقف کو انتہائی مایوس کن قرار دیا گیا ہے۔روہنگیا مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم پر خاموش رہنےکی وجہ سےآنگ سان سُوچی پرعالمی برادری خاص کراسلامی ملکوں کےدباؤ میں بتدریج اضافہ ہو رہا ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here