جعفریہ پریس – پاکستان کے سب سے بڑے تجارتی مرکز کراچی میں امام بارگاہ شاہ نجف مارٹن روڈ کے پاس ملک و اسلام دشمن تکفیری دہشت گردوں کی فائرنگ سے اسسٹنٹ ڈائریکٹر نیب سید غلام حیدر ولد ظہیر حیدر شہید کردئے گئے۔ تفصیلات کے مطابق دہشت گردوں نے 40 سالہ شہید غلام حیدر کو اس وقت اپنی درندگی کا نشانہ بنایا جب وہ اپنی کولیگ کو گھر چھوڑنے کے بعد اپنے گھر کی طرف روانہ تھے۔  واضح رہے کہ پچھلے دو دن میں دو ڈاکٹروں قاسم عباس، حیدر رضا، ایک وکیل وقار شاہ اور جوان مظہر حسین اور علی بہادر کو نشانہ بنایا جا چکا ہے۔ شیعہ علماء کونسل کے رہنماؤں نے ان بہیمانہ قتل واقعات کی پرزور مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ کراچی میں چن چن کر شیعہ اکابرین کو دہشت گردی کا نشانہ بنایا جا رہا ہے، مگر حکومت، عدلیہ، قانون نافذ کرنے والے ادارے دہشت گردوں کا قلع قمع کرنے میں یکسر ناکام ہیں، انہوں نے مطالبہ کیا کہ ریاستی ادارے کراچی میں جاری قتل و غارت گردی کے اس کھیل کو ختم کرنے میں سنجیدہ کردار ادا کریں اور ٹارگٹ کلنگ میں ملوث دہشت گردوں کو فی الفور گرفتار کر کے تختہ دار پر لٹکائیں-

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here