راولپنڈی /اسلام آباد 26دسمبر2016ء ( دفتر قائد )قائد ملت جعفریہ پاکستا ن علامہ سید ساجد علی نقوی کا کہنا ہے کہ سلیم صافی صاحب نے مورخہ 24دسمبر کوگڈکا لعدم ،بیڈ کا لعدم کے عنوان سے روزنامہ جنگ میں کالم تحریر کیا جس کو 25دسمبر 2016ء کو جرگہ پروگرام میں دہرایا ۔ موصوف نے اور باتوں کے علاوہ دو بڑے جھوٹ بولے ہیں ۔ ایک یہ کہ تحریک جعفریہ فرقہ واریت پھیلانے میں شریک رہی اور دوسرا یہ کہ تحریک جعفریہ نے بھی یہ دعویٰ کیا کہ ا نھوں نے اپنے عسکر ی ونگ کے ساتھ تعلق ختم کر دیا ہے ۔ یہ دو کھلے جھوٹ ہیں ۔تحریک جعفریہ کا فرقہ واریت سے دور کا بھی تعلق نہیں رہا اور تحریک جعفریہ کا کبھی کوئی عسکری ونگ نہیں تھا جس سے تعلق ختم کرنے کا سوال پیدا ہو۔
 
یاد رہے کہ موصوف تکفیریوں کے کھلے حامی رہے ہیں اور ہمیں تکفیریوں کے برابر لانے کی ظالمانہ پالیسی کو بڑھاوا دیتے رہے ہیں۔ ہم موصوف کی افتراء پردازیوں کے پس منظر اور پیش منظر کا جائزہ لے رہے ہیں۔اس حوالہ سے کسی کو نا مناسب اور غیر مہذب انداز میں تبصرہ اور تجزیہ وغیرہ کرنے کی اجازت نہیں ہے ۔
 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here