• علامہ رمضان توقیر سے علامہ آصف حسینی کی ملاقات
  • علامہ عارف حسین واحدی سے علماء کے وفد کی ملاقات
  • حساس نوعیت کے فیصلے پر سپریم کورٹ مزیدوضاحت جاری کرے ترجمان قائد ملت جعفریہ پاکستان
  • علامہ شبیر میثمی کی زیر صدارت یوم القد س کے انعقاد بارے مشاورتی اجلاس منعقد
  • برسی شہدائے سیہون شریف کا چھٹا اجتماع ہزاروں افراد شریک
  • اعلامیہ اسلامی تحریک پاکستان برائے عام انتخابات 2024
  • ھیئت آئمہ مساجد و علمائے امامیہ پاکستان کی جانب سے مجلس ترحیم
  • اسلامی تحریک پاکستان کے سیاسی سیل کا اجلاس اسلام آباد میں منعقد ہوا
  • مولانا امداد گھلو شیعہ علماء کونسل پاکستان جنوبی پنجاب کے صدر منتخب
  • اسلامی تحریک پاکستان کے زیر اہتمام فلسطین و کشمیر کانفرنس

تازه خبریں

دفترقائد ملت جعفریہ پاکستان قم کے زیرانتظام شہید اعجازحسین نقوی کی نویں برسی نہایت عقیدت واحترام کے ساتھ منائی گئی

 جعفریہ پریس- دفتر قائد ملت جعفریہ پاکستان شعبہ خدمت زائرین قم کے زیرانتظام قائد ملت جعفریہ کے با وفا ساتھی ، تحریک جعفریہ کے فعال کارکن، شہید اعجاز حسین نقوی کی نویں برسی نہایت عقیدت و احترام کے ساتھ منائی گئی ۔ جس میں علماء  طلباء اور زائرین نے کثیر تعداد میں شرکت کی – جعفریہ پریس کی رپورٹ کے مطابق پروگرام کے آغاز میں شہید کے بلندی درجات کے لئے قرآن خوانی کی گئی ۔ قرآن خوانی کے بعد دفتر قائد ملت قم کے شعبہ زائرین کے انچارچ سید ناصر عباس نقوی انقلابی نے اپنے مخصوص انداز میں شہید کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا شہید عزاداری اعجازحسین نقوی شب و روز مکتب اہلبیت کی خدمت کرتے رہے، شہید عالم دین تو نہ تھے لیکن علماء اور قیادت کا پیغام احسن انداز میں عوام تک پہنچاتے تھے، شہید ہمیشہ قیادت اور مرکزیت سے مربوط رہنے کی تاکید کرتے تھے، جب قائد ملت کو پابند سلاسل کیا گیا تو شہید نے احتجاج سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جب تک ہمارا باپ جیل میں ہے ہم چین سے نہیں بیٹھ سکتے ۔ رپورٹ کے مطابق برسی کے اجتماع سے قم کی معروف علمی شخصیت حجۃ الاسلام علامہ سید سجاد حسین کاظمی  نے خصوصی خطاب کیا – علامہ سجاد حسین کاظمی  نے شہید اور شہادت پر تفصیلی کرتے ہوئے کہا کہ شہید اعجاز حسین نقوی شروع سے ہی انقلابی افکار کے مالک تھے اور انقلاب اسلامی نے ان کے نظریات کو اور زیادہ تقویت دی ۔ دینی و قومی خدمات ان کی اہم خصلت تھی عزادری معاملات میں ان کا خاص کردارتھا اور اسی مشن کی حفاظت میں اپنی جان تک قربان کردی-